انور مسعود و امجد اسلام امجد کا دورہ قرطبہ

انور مسعود و امجد اسلام امجد کا دورہ قرطبہ

دینہ سے قرطبہ ہجرت کی داستان قسط چھتیس
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
مسجد قرطبہ کو دیکھنے کےلئےاکثر پاکستانی قرطبہ آتےرہتے ہیں ان میں کئی کی میزبانی کا شرف ہمیں حاصل ہوتا رہتا ہے ان میں سرکاری اہلکار تو پاکستان سے یورپ میں حکومتی خرچ پر کورسسز کرنے آئے ہوتے ہیں وہ بھی شامل ہیں اورانگلینڈ میں بسنے والے پاکستانی بھی شامل ہیں
کئی بار مزاقا
ہم ایک دوسرے کو کہتے ہیں کہ کاش ہمارے بس میں ہو تو مسجد قرطبہ کو کسی اور شہر میں منتقل کر دیں تاکہ روز روز آنے والے مہمانوں سے جان چھوٹ جائے
بعض دفعہ اپنے کام کاج چھوڑ کر ان مہمانوں کی میزبانی کرنا مشکل ہو جاتا ہے لیکن دوسری جانب اسی مسجد قرطبہ کے طفیل کئی علما شعرا سیاسی راہنماووں اور اعلی سرکاری اہلکاروں سے ملاقات کا شرف بھی حاصل ہوجاتا ہے جو عام حالات میں ہمیں شاید کھبی نصیب نہ ہوتا
ایسی ہی شخصیات میں پاکستان کے مشہور پنجابی شاعر انور مسعود اور اردو زبان کے نامور شاعر اور ڈرامہ نگار امجد اسلام امجد بھی شامل ہیں جن کے ہمرا پھالیہ کے غزالی اسکولز سسٹم کے چیرمین اور شاعر ضیغیم مغیرہ صاحب اور پنجاب یونیورسٹی یونین کے سابو صدر و الفلاح اسکالر شب برائے طلبا کے چیرمین عبدالشکور صاحب بھی شامل تھے
یہ سن دو ہزار گیارہ کی بات ہے 2011
انور مسعود صاحب سے گفتگو میں برارد اعجاز احمد نے پوچھا کہ آپ نے یورپ کے متعدد ممالک کے دورے کیے آپ نے ان کی ترقی کے راز اور ہمارے ملک کی ناکامی کی کون سی وجوہات کو سمجھتے ہیں ؟
انور مسعود صاحب نے کہا کہ گوری چمڑی ہونے سے ان کے زیادہ عقل مند ہونا ثابت نہی ان کے بڑوں نے کچھ اصول و ضوابط بنا کر ان پر عمل کیا اسلئے کامیاب رہے ہمارا ملک ابھی اتنا پرانا نہی نوزائیدہ ہے قوموں کو بنتے صدیاں لگتی ہیں پاکستان ابھی ستر سال پرانا ہے اسلئے بہت زیادہ مایوس نہی ہونا چائیے ہم نے کافی چیزیں حاصل بھی کی ہیں
میڈیا اور پاکستان کی نظریاتی شناخت کے حوالہ سے امجد اسلام امجد اور انور مسعود کا کہنا تھا کہ ہمارا میڈیا قوم کی ترجمانی نہی کرتا یہ چند افراد کا یرغمال ہے جو اپنی مرضی کا کلچر پروان چڑھانا چاہتے ہیں
دونوں شخصیات کو قریب سے دیکھنے کا اتفاق ہوا تو اندازہ ہوا کہ بلکل سادہ طبیعت کے ہیں ان میں احساس تفاخر نہی پایا جاتا امجد اسلام امجد نے پاکستان واپسی پر اپنے دورہ قرطبہ پر کالم بھی لکھا جس میں ہماری میزبانی کا شکریہ بھی ادا کیا

img_1302-1

img_1300-1

One thought on “

انور مسعود و امجد اسلام امجد کا دورہ قرطبہ

  1. اللہ آپ کے قلم میں مزید قوت عطا فرمائے اور اس کو مزید موثر بنانے میں آپ کا حامی و ناصر ہو قرطبی صاحب!۔۔۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *